سائنسدانوں نے بلیوٹوتھ والا کنڈوم ایجاد کرلیا

56

لندن: (سٹوری ٹوڈے آن لائن) اب تک تو کنڈوم بچوں کی پیدائش میں وقفے کے لیے ہی استعمال ہوتا تھا لیکن اب سائنسدانوں نے ایسا کنڈوم ایجاد کر لیا ہے جو اس کے علاوہ بھی بہت کچھ کرے گا۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق یہ ایک ’سمارٹ کنڈوم‘ ہے جس میں ایسی ٹیکنالوجی استعمال کی گئی ہے جو نہ صرف مرد کو اس کی جنسی کارکردگی سے آگاہ کرے گی بلکہ یہ بھی بتائے گی کہ اسے اپنی شریک حیات سے کوئی جنسی بیماری لاحق ہونے کا خطرہ ہے یا نہیں۔اس کے علاوہ یہ بھی بتائے گا کہ ازدواجی فرائض کی ادائیگی کے دوران مرد نے کتنی توانائی (Calories)صرف کی ہے۔

رپورٹ کے مطابق اس نئی ایجاد کا نام i.Conرکھا گیا ہے اور اس کی قیمت 80ڈالر (تقریباً 8ہزار 400روپے) ہے۔ اس کنڈوم کے ابتدائی سرے پر ایک گول ڈیوائس لگائی گئی ہے جو تمام مذکورہ کام سرانجام دینے کی صلاحیت رکھتی ہے۔اس ڈیوائس میں ایک ’نینو چپ‘ (Nano Chip) نصب کی گئی ہے اور بلیو ٹوتھ کی صلاحیت رکھی گئی ہے جس کے ذریعے اسے سمارٹ فون سے منسلک کیا جائے گا اور اس کے تمام نتائج فون کی سکرین پر دیکھے جا سکیں گے۔ناقدین کا کہنا ہے کہ یہ جدید ایجاد ہیک کی جا سکتی ہے اوراس کے ذریعے لوگوں کے خلوت کے لمحات کی جاسوسی کے لیے استعمال کی جا سکتی ہے۔ یہ کنڈوم ایجاد کرنے والی فرم ’برٹش کنڈومز‘ کا دعویٰ ہے کہ اب تک 90ہزار سے زائد لوگ اس کا آرڈر دے بھی چکے ہیں۔

 

loading...

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.