ڈالر بائے بائے ،پاک چین تجارت مقامی کرنسیوں میں کرنے کا فیصلہ

12

بیجنگ،اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان اوررچینی قیادت میں طے پایا ہے کہ دونوں ممالک نے آئندہ باہمی تجارت اپنی اپنی کرنسی میں کریں گے ، اس قبل دونوں ممالک کے مابین تجارت ڈالر کے ذریعے ہوتی تھی ۔

جیونیوز کے مطابق عمران خان کے دورہ چین کے تیسرے دن مشترکہ اعلامیے کے بعد دعویٰ کیا جارہا ہے کہ کہ دونوں ممالک کے درمیان مقامی کرنسی میں تجارت کے معاہدے پر فوری طور پر عمل در مد کیا جائیگا۔مقامی کرنسی میں باہمی تجارت کی خبر پہلی بار رواں سال کے آغاز میں سامنے آئی تھی اور اس حوالے سے معاہدے پر دستخط بھی ہوئے تھے اب اس پر باضابطہ طور پر عمل در آمدکا فیصلہ بھی کیاگیاہے ۔

معاہدے کے مطابق پاکستان اور چین نے مقامی کرنسی میں باہمی تجارت کا حجم دوگنا کر دیا ہے، پاکستانی کرنسی میں تجارتی حجم 165 ارب روپے سے بڑھا کر351 ارب روپے جبکہ چینی کرنسی میں تجارتی حجم 10 ارب یوآن سے بڑھا کر 20 ارب یوآن کیا گیا ہے ۔

علاوہ ازیںدونوں ممالک کے درمیان بینکوں اور مالی اداروں میں لین دین کا آسان اور مربوط نظام بنانے اور پاکستان کے صنعتی شعبے کی بحالی کے لئے چینی مہارت سے مدد لینے کا بھی فیصلہ کیاگیاہے ۔

واضح رہے کہ اس سے قبل پاکستان اور چین کے مابین باہمی تجار ت میں ڈالر کا اہم کردارتھا اور تمام ترتجارتی معاملات اورلین دین ڈالر کے ذریعے ہی ہوتا رہاہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.