’میں سیر کرنے گئی تھی اور اُن 3لوگوں نے مجھے اغوا کرکے جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا‘

16

پیرس(مانیٹرنگ ڈیسک) چھٹیاں منانے کے لیے فرانس گئی ایک برطانوی لڑکی کو تین مردوں نے اغواءکرکے جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ میل آن لائن کے مطابق برطانوی شہیر فیئرہیم کی 26سالہ ہینا پاور نامی اس لاءگریجوایٹ نے بتایا ہے کہ ”میں فرانس کے شہر مورزین میں رات کے وقت ایک کلب سے واپس اپنے دوست کے گھر جا رہی تھی کہ راستے میں ایک کار میرے پاس آ کر رکی، اس میں تین مرد سوار تھے۔ انہوں نے میرا نام لے کر پکارا اور بتایا کہ وہ میرے دوست کو جانتے ہیں۔ انہوں نے مجھے گاڑی میں بیٹھنے کو کہا اور کہا کہ وہ مجھے دوست کے گھر ڈراپ کر دیں گے۔“

ہینا کا کہنا تھا کہ ”میں انہیں اپنے دوست کے واقف کار سمجھ کر ان کی گاڑی میں بیٹھ گئی لیکن وہ مجھے گھر لیجانے کی بجائے ایک سنسان جگہ پر لے گئے جہاں گاڑی کے اندر ہی ڈرائیور نے مجھے زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔جب میں نے ان کی لفٹ دینے کی آفر قبول کی اور گاڑی میں بیٹھ گئی تو جلد ہی مجھے احساس ہو گیا کہ کچھ غلط ہونے والا ہے۔ اس پر میں نے چیخنا چلانا شروع کر دیا اور ان کی منتیں کرنے لگی کہ مجھے گاڑی سے باہر جانے دو لیکن گاڑی کی پچھلی سیٹ پر میرے ساتھ بیٹھے شخص نے مجھے مضبوطی سے پکڑ لیا اور ہاتھ سے میرا منہ بند کر دیا۔ مجھے زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد انہوں نے مجھے گاڑی سے باہر دھکا دے دیا اور میرا موبائل فون ساتھ لے کر فرار ہو گئے۔“

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.