ٹیچر کے 13 سالہ طالبعلم سے ناجائز تعلقات ، لڑکے کے والد کو کس طرح پتہ چلا اور عدالت نے استانی کو کتنے برس قید کی سزا سنائی؟

14

فونیکس (سٹوری ٹوڈے) امریکی ریاست ایریزونا میں ایک عدالت نے اپنے نابالغ طالبعلم کے ساتھ جسمانی تعلقات قائم کرنے کا اعتراف کرنے والی ٹیچر کو 20 برس قید کی سزا سنادی ہے۔ عدالت کی جانب سے استانی کو اس مقدمے میں کم ترین سزا سنائی گئی ہے کیونکہ پراسیکیوٹر نے اس کیلئے 27 برس قید کی سزا کا مطالبہ کیا تھا۔

ایریزونا میں یہ کیس مارچ میں سامنے آیا تھا جس پر استانی برٹنی زیمورا کو گرفتار کرلیا گیا تھا۔ 28 سالہ شادی شدہ ٹیچر پر الزام تھا کہ اس نے پرائمری کے اپنے 13 سالہ سٹوڈنٹ کو اپنے چنگل میں پھنسایا اور اس کا استحصال کیا ۔ برٹنی زیمورا پر الزام تھا کہ اس نے 8 بار نابالغ بچے کے ساتھ جسمانی تعلق بھی قائم کیا۔

تحقیقات کے دوران یہ بات سامنے آئی کہ استانی نے پہلے پہل نابالغ طالبعلم کو تعریفی کلمات بھیجے اس کے بعد اپنی برہنہ تصاویر دیں اور اس کا استحصال شروع کردیا۔ اپنی ٹیچر کے ساتھ تعلق کے باعث لڑکے نے کلاس سے غیر حاضر رہنا شروع کردیا اور اپنے دوستوں سے بھی دور رہنے لگا جس پر اس کے باپ کو شک ہوا ۔ بچے کے والد نے اس کے موبائل میں نگرانی کی ایپ انسٹال کی اور جائزہ لینا شروع کردیاجس دوران اس پر اس معاشقے کا انکشاف ہوا۔

اپنی بیوی کا کارنامہ سامنے آنے پر برٹنی کے شوہر نے بچے کے والدسے ملاقات کرکے اس کے ساتھ سمجھوتے کی کوشش کی لیکن اس نے انکار کردیا۔ معاملہ پولیس تک پہنچا تو برٹنی زیمورا کو مارچ میں گرفتار کرلیا گیا۔

کیس کی سماعت کے دوران متاثرہ طالبعلم کی والدہ کا کہنا تھا کہ کیس کے بارے میں ہونے والی باتوں کی وجہ سے اس کا بیٹا ڈپریشن کا شکار ہے۔ لڑکے کی ماں نے استانی سے کہا ’ تم نے میرے بیٹے اور میرے اہلخانہ کے ساتھ جو کیا ہے اس کے باعث میں تم سے شدید نفرت کرتی ہوں، تمہارے مزے کی سزا ہم کیوں بھگتیں، تمہیں کوئی حق نہیں کہ تم کبھی بھی بچے پیدا کرسکو، تمہیں کبھی اپنی فیملی کے بچوں کے قریب جانے کی بھی اجازت نہیں ہونی چاہیے۔‘

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.